نیشنل ہائی وےکونسل

نیشنل ہائی وے کونسل:۔
نیشنل ہائی وے کونسل کا بنیادی کام قومی حکمت عملی اور رہنما ہدایات تشکیل دینا ہے۔ این ایچ اے اپنے امور کی انجام دہی کیلئے ان ہدایت پر عمل کرتا ہے۔کونسل کو این ایچ اے کے امور کو باقاعدہ بنانے کیلئے ہدایات دینے کا اختیار حاصل ہے۔
تنظیمی ڈھانچہ:۔
قبل ازیں نیشنل ہائی وے کونسل کا سربراہ پاکستان کا وزیر اعظم ہوتا تھا۔جولائی 2001 میں حکومت پاکستان نے این ایچ اے ایکٹ 1991 میں ترمیم کی اور نیشنل ہائی وے کونسل کی تشکیل نو کی گئی ۔نیشنل ہائی وے کونسل کا موجودہ تنظیمی ڈھانچہ درج ذیل ہے۔
* وزیر مواصلات۔حکومت پاکستان۔صدر
* سیکرٹری فنانس ڈویژن ۔حکومت پاکستان۔ ممبر
* سیکرٹری پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ڈویژن حکومت پاکستان۔ممبر
* سیکرٹری مواصلات ۔حکومت پاکستان ۔ممبر
* صدر کی طرف سے نامزد کردہ شاہرات کی تعمیر نو اور منیجمنٹ کا ماہر ۔ممبر
* صدر کی جانب سے نامزد کردہ فنانس اور اکاؤنٹس کاماہر۔ممبر
* چیئرمین این ایچ اے ۔ممبر/ سیکرٹری
ہائی وے کونسل کے اختیارات / فرائض:۔
* وفاقی حکومت یا صوبائی حکومت یاکسی اور متعلقہ اتھارٹی کی طرف سے ادارہ قومی شاہرات کے سپرد کی گئی قومی شاہرات اور سٹریٹجک سڑکوں کی تعمیر ،ترقی اور مرمت کیلئے این ایچ اے ایگزیکٹو بورڈ کے پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ڈویژن کی مشاورت سے تیار کئے گئے پنجسالہ منصوبوں اور ان سے متعلقہ منصوبوں کی منظوری دینا۔
* اتھارٹی کی ترقیاتی رپورٹس پر غور کرنا ۔
* اپنے فرائض کی انجام دہی کے سلسلہ میں اتھارٹی کیلئے قومی حکمت عملی اور رہنما اصول وضع کرنا۔
* منصوبوں کا از سر نو جائزہ لینا۔
* اتھارٹی کا سالانہ بجٹ منظور کرنا۔